وزیراعلیٰ عثمان بزدار سے پاکستان ہندو کونسل کے بانی ایم این اے رمیش کمار کی ملاقات، اقلیتی برادری کی فلاح کے اقدامات پر تبادلہ خیال وزیراعلیٰ کا اقلیتی برادری کیلئے ملازمتوں کے مختص 5 فیصد کوٹے کے تحت خالی آسامیوں پر بھرتی کا اعلان 40 محکموں میں مینارٹی

2023

With the compliments of the
Directorate General Public Relations,
Government of the Punjab, Lahore.
Ph: +92 42 99201390-1-2


لاہور 18 نومبر: وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار سے رکن قومی اسمبلی و پاکستان ہندو کونسل کے بانی رمیش کمار وانکوانی نے ملاقات کی جس میں باہمی دلچسپی کے امور اور اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود کیلئے کئے گئے اقدامات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے اس موقع پر اقلیتی برادری کیلئے ملازمتوں کے مختص 5 فیصد کوٹے کے تحت خالی آسامیوں پر بھرتی کا اعلان کیا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ محکمہ انسانی حقوق و اقلیتی امور کو ان آسامیوں پر جلد بھرتیوں کیلئے ہدایات جاری کردی ہیں اور اس مقصد کیلئے پنجاب کے محکموں سے ملازمتوں کا ڈیٹا اکٹھا کیا گیا ہے۔سابق حکومت کے دور میں اقلیتی برادری کیلئے ملازمتوں کے مختص کوٹے پر عملدرآمد نہیں کیا گیااور ماضی میں مختص کوٹے کے تحت آسامیوں پر بھرتی نہ کرنے کی وجہ سے اقلیتی برادری کی دل آزاری ہوئی۔ہماری حکومت نے اقلیتی برادری کیلئے ملازمتوں کے مختص کوٹے پر سوفیصد عملدرآمد یقینی بنایا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ پنجاب کے 40 محکموں میں مینارٹی سیل بنا دیئے ہیں اور فوکل پرسن مقرر کر دیئے ہیں جبکہ 144 تحصیلوں، 36 اضلاع اور 9 ڈویژن میں بھی مینارٹی سیل قائم کئے ہیں اور فوکل پرسن تعینات کر دیئے گئے ہیں۔ اقلیتوں سے متعلقہ ایشوز کو مینارٹی سیل اور فوکل پرسن حل کریں گے۔مینارٹی سیل کے قیام اور فوکل پرسن کی تعیناتی سے اقلیتوں کے مسائل نچلی سطح پر حل ہوں گے۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے کہا کہ اقلیتی برادری کی فلاح وبہبود کیلئے رواں مالی سال 2ارب 50کروڑ روپے خرچ کئے جا رہے ہیں۔ اقلیتوں کیلئے ہائر ایجوکیشن میں 2فیصد کوٹہ مقر ر کیا ہے۔2فیصد کوٹہ سے اقلیتی طلبہ پربہترین کالجوں او ریونیورسٹیوں میں اعلیٰ تعلیم کے دروازے کھل گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ رحیم یار خان کے علاقے بھونگ میں مندر کو ایک ماہ میں دوبارہ بحال کیا ہے۔بھونگ میں ایس ڈی پی او آفس کی منظوری دے دی ہے اوراس آفس کو جلد فنکشنل کردیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ پاکستان کی تعمیر و ترقی میں اقلیتوں کا کردار نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔ پاکستان کا آئین اقلیتوں کے بنیادی حقوق کو تحفظ فراہم کرتا ہے اور نئے پاکستان میں اقلیتوں کو برابر کے حقوق حاصل ہیں۔ اقلیتوں کو ترقی کے یکساں مواقع فراہم کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات کئے ہیں۔ اقلیتوں کوترقی کے یکساں مواقع دے کر قومی دھارے میں شامل کیا گیا ہے۔ رکن قومی اسمبلی و پاکستانی ہندو کونسل کے بانی رمیش کمار وانکوانی نے وزیراعلیٰ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ  آپ نے مختصر عرصے میں اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود کیلئے عملی کام کئے ہیں۔ آپ کی حکومت کے اقلیتی برادری کے حقوق کے تحفظ کیلئے پائیدار اقدامات کی تحسین کرتے ہیں۔بھونگ میں مندر کو بحال کرنے پر آپ مبارکباد کے مستحق ہیں۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ انسانی حقوق و اقلیتی امور نے آپ کی قیادت میں اقلیتوں کے جاب کوٹے پر عملدرآمد یقینی بنایا ہے۔آپ کی سربراہی میں اقلیتی برادری کے حقوق کے تحفظ کے حوالے سے محکمہ انسانی حقوق و اقلیتی امور کی کارکردگی دیگر صوبوں کے مقابلے میں سب سے بہتر ہے۔انہوں نے کہا کہ پنجاب حکومت نے اقلیتی برادری کی فلاح و بہبود میں لیڈ لی ہے۔پرنسپل سیکرٹری وزیراعلیٰ پنجاب بھی اس موقع پر موجود تھے۔